اہم خبریںملکی خبریں

55سالوں بعد بھارت-بنگلہ دیش کے درمیان چلے گی ٹرین، 17 دسمبر کو دونوں ملکوں کے وزراے اعظم کریں گے افتتاح

مغربی بنگال(ہلڈی واڑی) ہماری آواز: مغربی بنگال میں ہلدی باڑی اور بنگلہ دیش میں واقع چل ہٹی کے درمیان ریل کا راستہ 55 سال بعد 17 دسمبر کو دوبارہ کھول دیا جائے گا۔ ہندوستان اور بنگلہ دیش کے وزیر اعظم اس کا افتتاح کریں گے۔ نارتھ ایسٹ فرنٹیئر ریلوے (NFR) کے ایک عہدیدار نے یہ اطلاع دی۔ 1965 میں بھارت اور اس وقت کے مشرقی پاکستان (موجودہ: بنگلہ دیش) کے مابین ریل رابطے ختم ہونے کے بعد کوچ بہار کی ہلدی واڑی اور بنگلہ دیش کی چل ہٹی کے مابین ریلوے لائن کو بند کردیا گیا تھا۔
این۔ ایف۔ آر۔ کے چیف تعلقات عامہ کے افسر ایس۔ چندا نے کہا : وزیر اعظم نریندر مودی اور ان کی بنگلہ دیشی ہم منصب شیخ حسینہ 17 دسمبر کو ہلدی باڑی – چل ہٹی ریل روٹ کا افتتاح کریں گی۔انہوں نے مزید کہا کہ چل ہٹی سے ہلدی باڑی جانے والی مال گاڑی کو این۔ایف۔آر۔ کے کٹہار ڈویژن میں شامل کیا جائے گا تاکہ ریل کا راستہ بحال کیا جاسکے۔
کٹیہار ڈویژنل ریلوے منیجر رویندر کمار ورما نے بتایا کہ منگل کو وزارت خارجہ نے عہدیداروں کو ریل روٹ کی بحالی کے بارے میں آگاہ کیا۔ این ایف آر نے بتایا کہ ہلدی باڑی ریلوے اسٹیشن سے بین الاقوامی سرحد تک فاصلہ ساڑھے چار کلو میٹر ہے اور بنگلہ دیش میں چل ہٹی سے بارڈر تک کا فاصلہ ساڑھے سات کلو میٹر ہے۔بدھ کے روز ہلدی باڑی اسٹیشن کا دورہ کرنے کے بعد ورما نے کہا کہ جب اس راستے پر مسافروں کی خدمات شروع ہوگی تو لوگ سات گھنٹے میں سلی گوڑی کے قریب واقع جلپائی گوڑی سے کولکاتہ پہنچ سکیں گے جس سے پہلے کے سفر کے وقت میں پانچ گھنٹے کی کمی واقع ہوگی۔

ہماری آواز

ہماری آواز ایک غیر جانب دار نیوز ویب سائٹ ہے جس پر آپ سچی خبروں کے ساتھ ساتھ مذہبی، ملی،قومی، سیاسی، سماجی، ادبی، فکری و اصلاحی مضامین اور شعر وشاعری پڑھ سکتے ہیں۔ یہی نہیں آپ خود بھی ہمیں اپنے پاس پڑوس کی خبریں اور مضامین وغیرہ بھیج سکتے ہیں۔

متعلقہ مضامین و خبریں

جواب دیں

Back to top button