علامہ شبیہ القادری مصلح قوم اور معمار ملت تھے: ضیاءالمجتبیٰ کامل

الدال علیٰ خیر کفاعلہ (شیئر کریں)

کیسریا میں منعقد ہوئی تعزیتی و دعائیہ تقریب

بہار / موتی ہاری /ہماری آواز

حضرت علامہ شبیہ القادری کا شمار ملک کے نامور علمائے کرام میں ہوتا تھا آپ ایک جید عالم دین دوراندیش مفکر اور قوم و ملت کے عظیم معمار تھے آپ نے پوری زندگی تبلیغ دین میں گزاری مذکورہ باتیں کیسریا میں منعقدہ تعزیتی نشست کے دوران خانقاہ جنابیہ حسینی شریف کے سجادہ نشیں پیر طریقت علامہ الحاج ضیاء المجتبیٰ کامل نے کہی اور مزید بتایا کہ آپ کی ولادت باسعادت 15/جولائی 1938ء کو موضع کٹائی ضلع مظفرپور میں ہوئی آبائی وطن پوکھریرا شریف ضلع سیتامڑھی ہے پانچ سال کی عمر میں رسم بسم اللہ خوانی ہوئی اس کے کئی مقتدر شخصیات سے کسب علم کرتے رہے اور ملک کے مشاہیر اداروں میں تعلیم حاصل کی 1959ء میں فراغت حاصل کی آپ نے ملک العلماء علامہ ظفرالدین بہاری علیہ الرحمہ جیسی مقتدر شخصیات سے اکتساب علم کیا اور مفتی اعظم ہند علامہ مصطفیٰ رضا خان علیہ الرحمہ سے بیعت و ارادت کی اور خلافت و اجازت بھی حاصل کی اور پوری زندگی دین کی تبلیغ و اشاعت میں صرف کردی جبکہ مولانا لطیف الرحمن مصباحی نے کہا کہ آپ درجنوں مدارس و مساجد کے بانی اور معمار قوم و ملت تھے آپ نے درجنوں کتابیں بھی تصنیف فرمائی اور شعروشاعری سے بھی شغف تھا عشق رسالت میں ڈوب کر بارگاہ رسالت میں نعت پاک کا ہدیہ پیش کیا آپ کے انتقال پرملال سے جو خلا پیدا ہوا ہے اس کا پر کرنا محال ہے جبکہ دارالعلوم قادریہ کے ناظم اعلیٰ مولانا سراج الحق اشرفی نے کہا کہ حضرت علامہ شبیہ القادری علیہ الرحمہ مفتی اعظم ہند علیہ الرحمہ کے مرید و خلیفہ تھے آپ نے پوری زندگی دین متین کی ترویج و اشاعت میں گزاری سرکاری ملازمت کے باوجود بھی ملت کی گرانقدر خدمات انجام دیے اس موقع سے مولانا محبوب عالم رضوی, مولانا منظور عالم قادری, مولانا جمیل اختر قادری, مولانا منور حسین احسن القادری, مولانا مشتاق احمد برہانی, مولانا حشمت علی رحمانی, مولانا علی رضا, مولانا مطیع الرحمن اشرفی, مولانا سید اکرم نوری, قاری توقیر رضا الہ آبادی, مولانا اعظم رضا فریدی, مولانا عبدالقدوس رضوی, حافظ عبدالمبین, قاری اشتیاق اصدقی, حافظ مخدوم علی احمد رضوی, صوفی شعیب رضا چمپارنی, قاری نوشاد عالم تیغی, مولانا حسنین رضا, مولانا عظیم الدین ثقافی, مفتی عارف رضا اشرفی, مفتی محمد سمیع اللہ قادری, مولانا سمیع اللہ مصباحی, جے ڈی یو لیڈر وصیل احمد خان, حاتم خان, امجد علی عرف گڈو خان, مکھیا فیضان مصطفیٰ,ماسٹر نظام الدین, حافظ رحمت رامپوری, قاری عبید رضا, ماسٹر غلام مصطفیٰ حیدری, قاری علی احمد خان,مولانا ناز محمد قادری,صحافی اشرف عالم,حافظ محمد عالم,آصف خان, کاشف انور ,ناہید خان,مولانا شاہد رضا,قاری آفتاب عالم نے اظہار تعزیت کیا اور دعائے مغفرت کی گئی

الدال علیٰ خیر کفاعلہ (شیئر کریں)

About انیس الرحمٰن چشتی

جناب انیس الرحمٰن عاقب چشتی صاحب صوبہ بہار کے ضلع موتی ہاری سے تعلق رکھنے والے ایک معروف شاعر اور سینیئر صحافی ہیں۔ ہماری آواز

Check Also

بچوں کی تعلیم وتربیت پر خصوصی دھیان دیں: سید نوراللہ شاہ بخاری

22 ذی القعدہ 1443 ھ مطابق 23 جون 2022 عیسوی بروز جمعرات مغربی راجستھان کی …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔