آزاد بھارت میں مسلمان آزاد کیوں نہیں؟

الدال علیٰ خیر کفاعلہ (شیئر کریں)

محمد فیضان رضا علیمی
مدیر اعلی سہ ماہی پیامِ بصیرت، سیتامڑھی

مکرمی! آج ۱۵/ اگست کا وہ دن ہے جس دن ہمارا پیارا ملک ہندوستان مغربی طاقتوں سے آزاد ہوا تھا۔ آج پورا ملک ۷۵ واں یوم آزادی منا رہا ہے جس میں ہر دھرم اور مذہب کے لوگ شامل ہے۔ خواہ وہ مسلم ہوں یا ہندو، سکھ ہوں یا عسائی، بودھ ہوں یا دوسرے مذاہب کے لوگ، سب کے سب پورے جوش و خروش اور جوش و جذبہ کے ساتھ یوم آزادی منا رہے ہیں اور ایک بھارتی ہونے کے ناطے یہ حق بھی ہے۔ لیکن آزاد بھارت میں اگست کا مہینہ شروع ہوتے ہی جہاں ہر طرف جشن آزادی کی تیاری شروع ہوجاتی ہے۔ لال قلعہ سے لے کر پورے ہندوستان کے سرکاری و غیر سرکاری دفاتر، تعلیم گاہوں اور سماجی و تنظیمی جگہوں میں جشن آزادی کے ترانے اور مجاہدین آزادی کے کارنامے پڑھے اور یاد کیے جاتے ہیں تاکہ ۱۵ اگست کی صبح ملک کی شناخت ترنگا جھنڈا پھیرایا جائے اور ترانے سناکر اور مجاہدین کو سلامی دے کر جشن منایا جاسکے۔ وہیں اسی آزاد بھارت میں موجودہ حکومت کے ٹکڑوں پر پل رہے بے دین و دھرم کے غنڈے ملک کی امن و شانتی اور ہندو مسلم ایکتا کو مسل رہے ہیں اور مسلمانوں کو اپنے ہی آزاد ملک میں ڈر اور خوف کے ماحول میں جینے پر مجبور کر رہے ہیں۔ اسی اگست کی تقریباً ۱۱/۱۲ تاریخ کو کانپور میں افسر احمد نامی ایک مسلم کو بجرنگ دل کے کچھ غنڈوں نے پولیس کے سامنے بےتحاشہ مارا پیٹا اور ایک مخصوص دھارمک نعرہ لگانے پر مجبور کیا۔

سوال یہ پیدا ہوتا ہے کہ

⭐ کیا آزاد بھارت کا یہی مطلب ہے کہ یہاں صرف ایک ہی دھرم کے لوگ آزاد رہیں باقی سب مقید؟
⭐ کیا اس آزاد بھارت میں مسلمانوں کو آزاد رہنے کا حق نہیں؟
⭐ کیا افسر احمد کے ساتھ جو ہوا وہ ایک آزاد ملک میں روا ہے؟
⭐ حکومت آزاد بھارت کے باشندوں کو آزادی کب دےگی؟

_مکرمی! یہ ایک افسر کے ساتھ ہوتا تو یہ کہا جاسکتا تھا کہ یہ غلطی سے ہوگیا ہے ان سب کو سزا دی جائے گی۔ وغیرہ وغیرہ یہاں تو ہر روز دسیوں افسروں کے ساتھ ویسا ہی ہو رہا ہے اور اس وقت مسلمان جہاں بھی رہ رہا ہے وہ ڈر اور خوف کے عالم رہتا ہے وہ اس خوف میں رہتا ہے آج کانپور کے افسر کے ساتھ ہوا کہ کل ہمارے ساتھ ہوگا۔

_لہذا مسلمانوں سے گزارش ہے اپنی زمین پیدا کریں اور ملک کی سیاسیت میں اپنی حصہ داری پیدا کرنے کی فکر کریں ورنہ پورا ملک ان غنڈوں کے ہاتھ تباہ ہوگا۔ اور حکومت ہند سے اپیل ہے کہ خدارا جشن آزادی کو جس جوش و خروش کے ساتھ مناتے ہیں اسی جذبہ کے ساتھ اپنے غنڈوں پر قابو رکھیں اور ملک کے اقلیتی طبقہ کے لوگوں کو آزاد بھارت میں آزاد زندگی گزارنے دیں۔

الدال علیٰ خیر کفاعلہ (شیئر کریں)

About ہماری آواز

ہماری آواز ایک غیر جانب دار نیوز ویب سائٹ ہے جس پر آپ سچی خبروں کے ساتھ ساتھ مذہبی، ملی،قومی، سیاسی، سماجی، ادبی، فکری و اصلاحی مضامین اور شعر وشاعری پڑھ سکتے ہیں۔ یہی نہیں آپ خود بھی ہمیں اپنے پاس پڑوس کی خبریں اور مضامین وغیرہ بھیج سکتے ہیں۔

Check Also

ہمیشہ باقی رہے جمہوریت ہندوستان کی!

تحریر: جاوید اختر بھارتی یہ حقیقت ہے کہ علماء کرام کی بدولت ہی بھارت انگریزوں …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔