منقبت: جگرگوشہ فاطمہ جا رہا ہے

الدال علیٰ خیر کفاعلہ (شیئر کریں)

نتیجہ فکر: ازؔہرالقادؔری
جامعہ اہل سنت امدادالعلوم مٹہنا کھنڈسری
مشیراعلیٰ: ہماری آواز، سدھارتھ نگر (یوپی) انڈیا
9559494786 = 9450387786

کہوں کس طرح ! آنکھ ” نَم“ ہورہی ہے ”غموں“ سے کلیجہ پھٹا جا رہاہے
”حسین ابن حیدر“ کی یاد آرہی ہے یہ دل سوے”کرب و بلا“جا رہاہے

سرِشام ”ظلم وستم“ سر اٹھاے بڑھے جب ”یزیدی نحوست“ کے ساے
تو ” کربل“ میں”نانا کے دیں“ کو بچانے ”جگر گوشہء فاطمہ“ جا رہاہے

”عَمرو،شِمر“ دونوں کی ”شامت“ تھی آئی بجز سلطنت کچھ دیا نہ دکھائی
مگر ”حر“ کی عظمت کا کیا پوچھنا ہے ”سلام“ آج ان پر پڑھا جا رہاہے

وہ ”عون ومحمد“ہوں ”قاسم کہ اکبر“وہ ”دودھی دہن“ چھ مہینے کا ”اصغر“
”نبی کے چمن“ کی حفاظت کی خاطر یہاں ”بچہ بچہ“ کٹا جا رہاہے

صد افسوس ! وَاللہ ! بعدِ شہادت ”خَواتین“ پر پھر عجب آئی ”آفت“
”سروں“ سے ”ڈوپٹے“ چھنے جا رہے ہیں ”محبت کا خیمہ“جلا جارہا ہے

”یزیدی“ سمجھتےتھے”بازی“ ہیں مارےحقیقت کی آواز تھی تم ہو ہارے
”امامت“ اسی کی ہے غدارو ! سن لو! جو”نیزے“ پہ آگے چڑھا جارہاہے

بحث جب کہ جاری تھی ”پیروجواں“ کی تو اتنے میں آواز آئی ”اذاں“ کی
تو بولے ”یزیدِشقی“ سے یہ ”عابد“ بتا ؟کس کا ”خطبہ“ پڑھا جا رہا ہے

وہ”جنت کی کلیاں“”مدینہ“ چلیں ہیں”شہربانو“”زینب“”سکینہ“ چلیں ہیں
وہ ”بیمار سجاد“ کی رہبری میں مدینہ ”لٹاقافلہ“ جا رہا ہے

عجب حال”صغری’“پہ ٹوٹی قیامت اے ازؔہر”دِگرگوں“ہوئی سب کی حالت
”غَمِ دہر“ ”سر“ ”ماں کی ممتا“ سے کہنے سوے ”مرقدِفاطمہ“ جارہا ہے

الدال علیٰ خیر کفاعلہ (شیئر کریں)

About ہماری آواز

ہماری آواز ایک غیر جانب دار نیوز ویب سائٹ ہے جس پر آپ سچی خبروں کے ساتھ ساتھ مذہبی، ملی،قومی، سیاسی، سماجی، ادبی، فکری و اصلاحی مضامین اور شعر وشاعری پڑھ سکتے ہیں۔ یہی نہیں آپ خود بھی ہمیں اپنے پاس پڑوس کی خبریں اور مضامین وغیرہ بھیج سکتے ہیں۔

Check Also

آنکھ ہےگِریاں ترے لیے

حضرت مفتی نظام الدین نوری نوراللہ مرقدہ کی یاد میں تڑپتے ہوئے دل کی آواز …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔