منقبت : سرزمین کربلا میں سب لٹایا ریت پر

الدال علیٰ خیر کفاعلہ (شیئر کریں)

ازقلم : محمدشوقین نواز شوق فریدی

دیں کی خاطر آیا حیدر کا گھرانا ریت پر
ایک اک کرکے لہو سب نے بہایا ریت پر

ابن حیدر نے رضائے کبریا کے واسطے
سر زمین کربلا میں سب لٹایا ریت پر

مذہب اسلام کی توقیر و عظمت کے لیے
سب لٹا کر آل اطہر، غم نہ کھایا ریت پر

عرش و کرسی کانپ اٹھے تھے اس گھڑی رب کی قسم
تیر جب ظالم نے اصغر پر چلایا ریت پر

پاگئے جس دم شہادت شوق آل مصطفیٰ
خوں کے آنسو ذرے ذرے نے بہایا ریت پر

الدال علیٰ خیر کفاعلہ (شیئر کریں)

About ہماری آواز

ہماری آواز ایک غیر جانب دار نیوز ویب سائٹ ہے جس پر آپ سچی خبروں کے ساتھ ساتھ مذہبی، ملی،قومی، سیاسی، سماجی، ادبی، فکری و اصلاحی مضامین اور شعر وشاعری پڑھ سکتے ہیں۔ یہی نہیں آپ خود بھی ہمیں اپنے پاس پڑوس کی خبریں اور مضامین وغیرہ بھیج سکتے ہیں۔

Check Also

آنکھ ہےگِریاں ترے لیے

حضرت مفتی نظام الدین نوری نوراللہ مرقدہ کی یاد میں تڑپتے ہوئے دل کی آواز …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔