نعت پاک: دل کی التجا

الدال علیٰ خیر کفاعلہ (شیئر کریں)
ازقلم: محمد شاہد رضا رضوی

میرے آقا مدینہ بلا لو میرے دل کی یہی التجا ہے
اپنا نورانی روضہ دکھا دو میرے دل کی یہی التجا ہے

دیکھ لوں میں بھی گنبد تمہارا، آنکھ میں بھر لوں منظر وہ سارا
اذن طیبہ کا آقا عطاء ہو میرے دل کی یہی التجا ہے

جس کو جو کچھ جہاں سے ملا ہے، سب کو تم نے ہی آقا دیا ہے
نعت کہنے کا ڈھنگ بھی سکھا دو میرے دل کی یہی التجا ہے

میری غلطی کو آقا چھپا لو، نار دوزخ سے مجھکو بچا لو
اپنے دامن میں مجھ کو چھپا لو میرے دل کی یہی التجا ہے

ٹوٹ جائے نہ سانسوں کے دھاگے، دیکھ لوں نوری جلوہ میں آکے
کاش میرا بھی مدفن وہاں ہو میرے دل کی یہی التجا ہے

میری نیا بھنور میں پھنسی ہے، اور مخالف ہوا بھی چلی ہے
اے حبيب دو عالم بچا لو میرے دل کی یہی التجا ہے

تم ہی غمخوار مشکل کشا ہو، تم ہی داتا ہو حاجت روا ہو
دور میری بھی ساری بلا ہو میرے دل کی یہی التجا ہے

تم ہی قاسم ہو مالک ہو آقا، رب نے پیدا کیا تم نے پالا
چشم رحمت کی مجھ پہ سدا ہو میرے دل کی یہی التجا ہے

چاند صورت تمہاری نہارے، تارے بڑھ بڑھ کے صدقہ اتارے
خواب میں اپنا چہرا دکھا دو میرے دل کی یہی التجا ہے

صدقہ حسنین و زہرا علی کا، غوث و خواجہ رضا ازہری کا
بھیک شاہد کو داتا عطاء ہو میرے دل کی یہی التجا ہے

الدال علیٰ خیر کفاعلہ (شیئر کریں)

About ہماری آواز

ہماری آواز ایک غیر جانب دار نیوز ویب سائٹ ہے جس پر آپ سچی خبروں کے ساتھ ساتھ مذہبی، ملی،قومی، سیاسی، سماجی، ادبی، فکری و اصلاحی مضامین اور شعر وشاعری پڑھ سکتے ہیں۔ یہی نہیں آپ خود بھی ہمیں اپنے پاس پڑوس کی خبریں اور مضامین وغیرہ بھیج سکتے ہیں۔

Check Also

سلام در شان سلطان انبیاء

اللہ کے حبیب و پیمبر پہ ہو سلامسلطان انبیاء پہ ہو، سرور پہ ہو سلام …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔