اہل بیت منقبت

یادِ سیدہ خدیجۃ الکبریٰ رضی اللہ عنہا

10 رمضان المبارک یوم وصالِ ام المومنین مخدومۂ کائنات، راحتِ جانِ مصطفیٰ ﷺ ، پیکرِ صدق وصفا ، ہلال عزم و یقیں، سیدہ طاہرہ عفیفہ خدیجة الکبری رضی اللہ عنہا ہے تمام اہل حق اُس عظیم ماں کو یاد کرکے اپنی اپنی ماؤں کو زبردست خراج عقیدت پیش کریں ، اور بڑوں کی عزت و تکریم کا ہمیشہ کیلیے عہد کریں، اللہ تعالی ان کے فیوض و برکات سے ہمیں مالا مال فرمائے آمین
"” "” "”

جہانِ حق میں ہے کردار جاوداں تیرا
شَرَف عظیم ہے اے مومنوں کی ماں تیرا

تری مثال نہیں ، اے خدیجۃ الکبرٰی
وجودِ پاک ہے یکتاے دوجہاں تیرا

رُقَیّہ زینب و کُلثوم و زہرا کی اَمی
ہے افتخار دو عالم یہ خانداں تیرا

تری حیات ہے اَسرارِ مصطفیٰ کی امین
قسم خدا کی مُعزَّز ہے ہر نشاں تیرا

تری وفائیں ہیں تسکینِ سید الکونین
بڑے شرَف کا خزینہ ہے سائباں تیرا

عروج تیرا ، قیامت تلک نہ کم ہوگا
خیال رکھتے ہیں سَیَّاحِ لامکاں تیرا

عفیفہ ، طیّبہ ، مخدومہ طاہرہ ہے تو
بہت ہی سُتھرا ہے ہر رنگ ، بے گماں تیرا

ملی ہےچشمِ دوعالم کو تجھ سے بِینائی
بنا ہے مرکزِ انوار ، آستاں تیرا

ملی ہے سایۂ حب نبی میں شادابی
نہ خشک ہوگا فضائل کا گلستاں تیرا

فدا ہیں تیرے اِس اعزاز پر سبھی اعزاز
دلِ رسولِ خدا، بن گیا مکاں تیرا

تو استعارۂ ایثار و صبر و قربانی
دلوں پہ اب بھی ہے کردار حکمراں تیرا

نبی کی جان کا صدقہ بنی تری ہستی
ہے لازوال ہر اک رنگِ داستاں تیرا

چراغِ حق کیلیے تیری زندگی فانوس
کسی ہَوا سے نہ ٹوٹا حِصارِ جاں تیرا

گُندھے ہیں حلقۂ آفاق میں ترے موتی
کہ نامِ پاک ہے تسبیح اِنس و جاں تیرا

نبی کے نام پہ سب کچھ لٹا دیا تو نے
وفاشِعاری کا جوہر ہے بے کراں تیرا

شہ امم پہ ترے گھر میں آیتیں اتریں
بہت عزیز ، خدا کو ہے آشیاں تیرا

بلندیاں ترے قدموں پہ سَر خَمِیدہ ہیں
ہر ایک ذرۂ پا ، رشکِ آسماں تیرا

جھلک ہے جسمیں خواتین کے تقدُّس کی
ہے اب بھی نَیّرِ کردار ضوفشاں تیرا

سَرِ نیاز جھکا ہے ، تمام اُمّت کا
کہ دیں کے واسطے احسان ہے گراں تیرا

ڈرے گا کیا کوئ مومن ، بھلا مصائب سے
کہ جب ہے سر پہ ، اے ماں دستِ مہرباں تیرا

تری ثنا سے تو عاجِز ہے یہ تَفَکُّر بھی
قلم فریدی کا ، کیسے لکھے بیاں تیرا
"” "” "” "”

ازقلم: سلمان رضا فریدی صدیقی مصباحی بارہ بنکوی مسقط عمان
0096899633908