ملکی خبریں

جامعہ خواجہ قطب الدین بختیار کاکی میں جشن معراج النبیﷺ پُروقار طریقے سے منایا گیا

دہلی: 12/مارچ، ہماری آواز(شبیر احمد نظامی)

علماء کے ہاتھوں مولانا مقبول احمد سالک مصباحی کی خانقاہ برکاتیہ سے خلافت و اجازت ملنے پردستار بندی و گل پوشی کا اہتمام کیا گیا۔ پروگرام کوخطاب کرتے ہوئے مولانا حافظ محمدیعقوب علی خان خطیب و امام خلیل اللہ مسجد بٹلہ ہاؤس کا معراج النبی صلی اللہ ولیہ وسلم کے موضوع پر مختصر مگر خصوصی خطاب ہوا۔ مولانا نے بالترتیب کمال مہارت سے معراج شریف کے واقعات کو بیان کیا۔ اور کہا کہ معراج شریف کی اہم یادگار نماز ہے۔ جو فرض تو پچاس وقت کی ہوئی ہے مگر ادائیگی صرف پانچ وقت کی کرنی ہے۔ اور ثواب پورے پورے پچاس وقت کی لینی ہے۔ اس سے اچھا سودا جنت کا کہاملے گا۔ مولانا زین اللہ نظامی نے مولانا مقبول احمد سالک مصباحی کو درگاہ مارہرہ مطہرہ سے اجازت و خلافت اور وکیل برکاتی کا اعزاز ملنے پر مولانا کو تمام علماء و حاضرین کی طرف سے مبارک پیش کیا۔ اور کہا کہ مولانا سالک مصباحی دہلی کے قدیم علماء میں سے ہیں۔ انھوں نے جامعہ حضرت نظام الدین اولیاء میں علامہ ارشد القادری علیہ الرحمہ کے ساتھ کام کیاہے۔ یہ اعزاز ان کاحق تھا۔ اور حق بہ حق دار رسید۔ مولانا یعقوب صاحب اور مولانا زین اللہ نظامی نے سالک مصباحی صاحب کی اعزاز کی یادگار میں دستار بندی فرمائی۔ حاضرین نے پھولوں کا ہار پیش کیا۔مولانا مقبول احمد سالک مصباحی نے کہا تمام علماء و حاضرین کا اس عزت افزائی پر شکریہ ادا کیا۔ اور کہا کہ میری کوشش ہوگی کہ بہتر طریقے سے قوم و ملت کی دینی و دعوتی خدمت کروں۔ مولانا سالک مصباحی نے کہاکہ خانقاہ برکاتیہ نے بھارت میں دین کو پھیلایا اور بچانے میں تاریخی رول ادا کیاہے۔ اور کہا کہ عصر حاضر میں اس کے انقلابی سجادہ نشیں علامہ سید سبطین حیدر عالمی سطح پر دین کی تبلیغ و اشاعت کا نیٹ ورک قائم کررہے ہیں۔
پروگرام کا آغاز بعد نماز عشاء ساڑھے بجے قاری غلام احمد رضا قطبی کی تلاوت کلام پاک سے ہوا۔ بعدہ جا معہ خواجہ قطب الدین بختیا رکاکی کے طلبہ مداح رسول بلال احمد خورد ، مداح رسول غلام احمد رضا قطبی نے نعت و منقبت کی شکل میں بارگاہ رسالت مآب میں خراج عقیدت پیش کیا۔ شب معراج کے حوالے سے جامعہ خواجہ قطب الدین بختیار کاکی میں منعقدہ محفل عید میلاد النبیﷺ میں اہل محلہ کے علاوہ دیگر علاقوں کے بھی علماء و ائمہ شریک ہوئے۔ آج کی اس مجلس خیر و برکت میں عالی جناب ڈاکٹر احمد شیخ صاحب ممبئی والے کے والد محترم کی مغفرت اور بلندی درجات کی دعا کی گئی۔ جب کہ مرحوم کے لیے قرآن خوانی جامعہ خواجہ کے طلبہ دو مرتبہ پہلے ہی کر چکے تھے۔ اسی طرح عزیز القدرعالی جناب عرفان عالم اشرفی خلیفہ حضور اشرف ملت کی دادی جان مرحومہ کے لیے بھی دعائیں کی گئیں۔ان کرم فرماؤں کی طرف سے علماء و ائمہ اورطلبہ و اساتذہ اور عوام اہل سنت کی شایان شان ضیافت بھی کی گئی۔
شرکا جشن میں مولانا اقلیم رضا مصباحی لمرا فاؤنڈیشن شاہین باغ ، مولانا غفران احمد غوثیہ مسجد جسولہ گاؤں ، مداح رسول قاری شفیق احمد سعودی والے ، قاری کفایت اللہ قادری ، قاری طیب علی قادری ، مداح رسول قاری احمد رضا نورانی مسجد جے جے کالونی ، حافظ عبد الودود ، حافظ طیب علی قطبی ، بلال احمد کلاں وغیرہ نے مہمانوں کی ضیافت اور انتظامات میں بڑھ چڑھ کر حصہ لیا۔ معاون خصوصی جناب غوث محمد فاروقی شاہین باغ ، ہمدرد قوم جناب ممتاز احمد ،عبد الرحمن نورانی مسجد ،جے جے کالونی ،ریئس احمد مصطفیٰ مسجد کھادر ، شمشاد احمد ، شہزاد احمد ،محمد کیف وغیرہ نے اپنی موجودگی سے پروگرام کو کامیاب بنایا۔

ہماری آواز

ہماری آواز ایک غیر جانب دار نیوز ویب سائٹ ہے جس پر آپ سچی خبروں کے ساتھ ساتھ مذہبی، ملی،قومی، سیاسی، سماجی، ادبی، فکری و اصلاحی مضامین اور شعر وشاعری پڑھ سکتے ہیں۔ یہی نہیں آپ خود بھی ہمیں اپنے پاس پڑوس کی خبریں اور مضامین وغیرہ بھیج سکتے ہیں۔

متعلقہ مضامین و خبریں

جواب دیں

Back to top button