یوپی

علی گڑھ: مدرسہ اصلاح معاشرہ تعلیم آباد میں جشنِ معراجِ النبیﷺ کا انعقاد

نماز مؤمنوں کے لیے ربِ قدیر کے طرف سے ایک عظیم تحفہ ہے: مولانا برکات احمد مجددی

علی گڑھ: 12/مارچ، ہماری آواز(امجدی) کل ہند انجمن اصلاح معاشرہ اہل سنت و جماعت علی گڑھ کی جانب سے شب معراج النبی صلی اللہ تعالیٰ علیہ وسلم کے موقع پر مدرسہ اصلاح معاشرہ تعلیم آباد وحید نگر علی گڑھ میں گل گلزارِ برکاتیت شیخ المشائخ امین ملت حضور سید محمد امین میاں قادری برکاتی (سجادہ نشین خانقاہ برکاتیہ مارہرہ مطہرہ) مدظلہ العالی والنورانی کی سرپرستی و شہزادہ حضور امین ملت محبوب العلماء حضور سید محمد امان میاں قادری (ولی عہد خانقاہ برکاتیہ مارہرہ مطہرہ) کی صدارت اور عالیجناب سید مصطفی علی قادری (نگراں کل ہند انجمن اصلاح معاشرہ اہل سنت و جماعت علی گڑھ) کی قیادت و مولانا شمشاد اجمل برکاتی، مولانا غلام مرسلین اشرفی صاحبان کی نگرانی میں جشنِ معراجِ النبی صلی اللہ تعالیٰ علیہ وسلم کا انعقاد ہوا. جشن کا آغاز ضیاء الرحمن امجدی (استاذ مدرسہ اصلاح معاشرہ تعلیم آباد) کی تلاوت قرآن پاک سے ہوا. اس کے بعد نعت پاک مولانا صوفی سید اوصاف علی مجددی، مولانا ساجد نصیری، مولانا شہباز احمد مرکزی، محمد بلال نے پیش کی.
قنوج سے مہمان خصوصی کےطور پر حضور بحرالعرفان مفتی آفاق احمد مجددی علیہ الرحمۃ کے صاحبزادے حضرت مولانا برکات احمد مجددی صاحب قبلہ تشریف لائے اور دینی تعلیم کی فضیلت و سفرِ معراج النبی صلی اللہ تعالیٰ علیہ وسلم پر روشنی ڈالتے ہوئے کہاکہ اللہ رب العزت نے اپنے محبوب امام الانبیاء حضرت محمد مصطفیٰ صلی اللہ تعالیٰ علیہ وسلم کو ایک ہی رات میں مسجدِ حرام سے مسجدِ اقصیٰ تک سیر کرائی پھر وہاں سے آسمانِ دنیاپر تشریف لے گئے جہاں شبِ معراج میں حضور صلی اللہ تعالیٰ علیہ وسلم کو اللہ تعالیٰ سے ہم کلامی کاشرف حاصل ہوا ،جس رات میں آپ کو نماز جیسا عظیم تحفہ ملا ،گویا نماز مؤمنوں کے لئے ربِ قدیر کے طرف سے ایک عظیم تحفہ ہے ۔
نظامت مدرسہ اصلاح معاشرہ تعلیم آباد علی گڑھ کے استاذ ضیاء الرحمن امجدی نے کی.
اس موقع پر البرکات پبلک اسکول کے مؤقر استاذ مولانا علاءالدین جامعی صاحب اور جناب اسرار، محمد ممتاز، محمد طارق وغیرہ موجود تھے.
صلاۃ وسلم کے بعد فاتحہ کا اہتمام کیا گیا.

زیر اہتمام :
کل ہند انجمن اصلاح معاشرہ اہل سنت و جماعت علی گڑھ

ہماری آواز

ہماری آواز ایک غیر جانب دار نیوز ویب سائٹ ہے جس پر آپ سچی خبروں کے ساتھ ساتھ مذہبی، ملی،قومی، سیاسی، سماجی، ادبی، فکری و اصلاحی مضامین اور شعر وشاعری پڑھ سکتے ہیں۔ یہی نہیں آپ خود بھی ہمیں اپنے پاس پڑوس کی خبریں اور مضامین وغیرہ بھیج سکتے ہیں۔

متعلقہ مضامین و خبریں

جواب دیں

Back to top button