بھائی: ایک سچا معاون

الدال علیٰ خیر کفاعلہ (شیئر کریں)

تحریر: محمد ہارون مصباحی فتح پوری


باپ کے بعد بھائی ہی وہ انسان ہوتا ہے جو ہماری کامیابی کے لیے کوشش بھی کرتا ہے اور دعا بھی، جو ہماری خوبیوں اور صلاحیتوں کا اعتراف بھی کرتا ہے اور دوسروں سے بیان بھی، جو ہمیں ہر اس نفع میں کھلے دل سے شریک کر لیتا ہے جو اسے حاصل ہو رہا ہو۔
دنیا میں ایک ایسا بھی انسان گزرا ہے جس نے اپنے بھائی کو دنیا و آخرت کا سب سے بڑا منصب دلوا کر انسانی تاریخ میں اخوت کے رشتے کو معراج عطا کر دی۔ وہ عظیم ہستی ہے حضرت موسیٰ علی نبينا و عليه الصلاة و السلام کی جنھوں نے اپنے بھائی حضرت ہارون علیہ السلام کے لیے بارگاہ رب العزت میں منصب نبوت کی دعا کی جو قبول ہو گئی۔
قرآن کریم میں حضرت موسیٰ علیہ السلام کی اپنے بھائی حضرت ہارون علیہ السلام کے لیے دعا کا ذکر یوں ہے: 
وَٱجۡعَل لِّي وَزِيرٗا مِّنۡ أَهۡلِي. هَٰرُونَ أَخِي. ٱشۡدُدۡ بِهِۦٓ أَزۡرِي. وَأَشۡرِكۡهُ فِيٓ أَمۡرِي. (سورۂ طٰهٰ، ۲۹-۳۲) 
"(میرے رب!) اور میرے لیے میرے گھر والوں میں سے ایک معاون بنا دے، ہارون کو جو میرا بھائی ہے، اس کے ذریعے میری کمر مضبوط کر دے اور اسے میرے کام میں شریک کر دے۔”
روایت میں آتا ہے کہ ایک بار حضرت عائشہ صدیقہ رضی اللہ عنہا عمرے کے ارادے سے روانہ ہوئیں، دوران سفر ایک اعرابی کے یہاں مقیم تھیں کہ ایک آدمی کو دیکھا جو لوگوں سے پوچھ رہا ہے کہ دنیا میں کس بھائی نے اپنے بھائی کو سب سے زیادہ نفع پہنچایا ہے؟ اس سوال پر سب خاموش ہو گئے اور بولے کہ ہمیں اس کا علم نہیں۔ اس آدمی نے کہا کہ اللہ کی قسم مجھے معلوم ہے۔
سیدہ عائشہ صدیقہ رضی اللہ عنہا فرماتی ہیں کہ میں نے اپنے دل میں سوچا کہ یہ شخص ان شاء اللہ کہے بغیر قسم کھا رہا ہے تو ضرور اسے معلوم ہوگا۔
لوگوں نے اس سے پوچھا کہ بتاؤ، کون ہے وہ؟ اس نے جواب دیا کہ وہ موسیٰ علیہ السلام ہیں کیوں کہ انھوں نے اپنے بھائی کو اپنی دعا سے نبوت جیسا سب سے عظیم منصب دلوایا ہے۔
سیدہ عائشہ فرماتی ہیں کہ یہ سن کر میں نے دل میں سوچا کہ واقعی بات تو اس نے سچ کہی، واقعتا اس سے زیادہ کوئی بھائی اپنے بھائی کو نفع نہیں پہنچا سکتا ہے۔ (تفسیر ابن کثیر، سورہ طہ) 

وفا، خلوص، محبت ہے خون میں شامل
حبیب بھائی سے بڑھ کر کوئی نہیں ہوتا

الدال علیٰ خیر کفاعلہ (شیئر کریں)

About ہماری آواز

ہماری آواز ایک غیر جانب دار نیوز ویب سائٹ ہے جس پر آپ سچی خبروں کے ساتھ ساتھ مذہبی، ملی،قومی، سیاسی، سماجی، ادبی، فکری و اصلاحی مضامین اور شعر وشاعری پڑھ سکتے ہیں۔ یہی نہیں آپ خود بھی ہمیں اپنے پاس پڑوس کی خبریں اور مضامین وغیرہ بھیج سکتے ہیں۔

Check Also

ایسی گرمی ہے کہ پیلے پھول بھی کالے پڑ گئے

ازقلم: محمد ہاشم اعظمی مصباحینوادہ مبارکپور اعظم گڈھ یوپی مکرمی! یہ بات سب کو معلوم …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔