قومی گیت: مرے پیارے اے وطن

الدال علیٰ خیر کفاعلہ (شیئر کریں)

نتیجہ فکر: ذکی طارق بارہ بنکوی
سعادت گنج،بارہ بنکی،یوپی

مرے پیارے اے وطن مرے پیارے اے وطن
ساری دنیا سے حسیں اور نرالے اے وطن
مرے پیارے اے وطن مرے پیارے اے وطن

تیری عظمت پہ کوئی آنچ نہ آنے دیں گے
اس ترنگے کا کبھی مان نہ جانے دیں گے
خونِ دل اپنا پلا کر مرے پالے اے وطن
مرے پیارے اے وطن مرے پیارے اے وطن

بسمل،اشفاق،حمید اور بھگت سنگھ تیرے
جب تری آن پہ ہنستے ہوئے قربان ہوئے
ملے آزادی کے تب جاکے اجالے اے وطن
مرے پیارے اے وطن مرے پیارے اے وطن

جن کی تو جاگتی آنکھوں کا سہانا سا ہے خواب
گاندھی و نہرو کا دنیا میں نہیں کوئی جواب
کیا حسیں رتن تری گود نے پائے اے وطن
مرے پیارے اے وطن مرے پیارے اے وطن

مرے بھارت اے مرے ملک مرے جانِ جہاں
تری شان اور تری شوکت کے انوکھے ہیں نشاں
گرجا و مندر و مسجد اور شوالے اے وطن
مرے پیارے اے وطن مرے پیارے اے وطن

یہ "ذکی” ہی نہیں تنہا ہے پرستار ترا
یعنی شیدائی ہے یہ سارا ہی سنسار ترا
ہر کہیں پر ہیں ترے چاہنے والے اے وطن
مرے پیارے اے وطن مرے پیارے اے وطن

الدال علیٰ خیر کفاعلہ (شیئر کریں)

About ہماری آواز

ہماری آواز ایک غیر جانب دار نیوز ویب سائٹ ہے جس پر آپ سچی خبروں کے ساتھ ساتھ مذہبی، ملی،قومی، سیاسی، سماجی، ادبی، فکری و اصلاحی مضامین اور شعر وشاعری پڑھ سکتے ہیں۔ یہی نہیں آپ خود بھی ہمیں اپنے پاس پڑوس کی خبریں اور مضامین وغیرہ بھیج سکتے ہیں۔

Check Also

قومی گیت: پھر دیش کو سرسبز بنا کیوں نہیں دیتے

نتیجہ فکر: محمد زاہد رضا بنارسی پھر دیش کو سرسبز بنا کیوں نہیں دیتےتم اس …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔