شعر و شاعری منقبت

منقبت: عظمتوں کے پاسباں تھے سیدی اختر رضا

نتیجۂ فکر: محمد عسجد رضا نوری، مہراج گنج

عظمتوں کے پاسباں تھے سیدی اختر رضا
اھلسنت کا نشاں تھے سیدی اختر رضا

زہدوتقوی علم وحکمت فکروفن کی بزم میں
سب پہ فاٸق بے گماں تھے سیدی اختر رضا

غوث اعظم کے توسل اعلی حضرت کے طفیل
حق کے میر کارواں تھے سیدی اختر رضا

اختر برج شرافت نیر چرخ کرم
پیار کے بحر رواں تھے سیدی اختر رضا

جلوہ احمد رضا اور پرتوے حامد رضا
مفتی اعظم کی شاں تھے سیدی اختر رضا

جملہ ارباب بصیرت کا کھلا اعلان ہے
مرکز ہر نکتہ داں تھے سیدی اختر رضا

مرجع فقہ وفتاوی شارح قول ونبی
دین حق کے ترجماں تھے سیدی اختر رضا

عشق سرکار دوعالم کی بدولت دہر میں
مقتداۓ سنیاں تھے سیدی اختر رضا

اختر خستہ جگر کا حال یہ مشہور ہے
اس پہ بے حد مہرباں تھے سیدی اختر رضا

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے