شعر و شاعری نعت رسول

نعت رسول: ‏‎سراپا جلوۂ حق مصطفیٰ کتنے نرالے ہیں

طرز اقبال کی پیروی

ڈاکٹر اقبال کے مصرع "یہ عاشق کون سی بستی کے یارب رہنے والے ہیں” پر "بشکل نعت” طبع آزمائی کی کوشش

نتیجۂ فکر: شمس تبریز انجمٓ
جدہ، حجاز مقدس

‏‎سراپا جلوۂ حق مصطفیٰ کتنے نرالے ہیں
زمین و آسماں پر سمت ان کے بول بالے ہیں

‏‎عروج و ارتقاء اس شخص کے حصے میں آئی ہے
طریقِ مصطفیٰ میں زندگی اپنی جو ڈھالے ہیں

‏‎ہمارا کچھ نہیں ہے مصطفیٰ کی ہے عطا سے سب
پدر، مادر، برادر، مال و زر ان کے حوالے ہیں

‏‎خدا کا شکر ہے نعمت ہمیں ملتی ہے روزانہ
طفیلِ مصطفیٰ ہی دوستوں کھاتے نوالے ہیں

‏‎ملی ہے بھیک میں شمس و قمر کو روشنی بیشک
نبی کے نور سے ہی دو جہاں انجمٓ اجالے ہیں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے